کھیل جاری رہے: نینا عادل

بےجھجک،بےخطر

بےدھڑک وارکر

میری گردن اُڑا

اورخوں سےمرےکامیابی کےاپنی نۓجام بھر

چھین لےحسن وخوبی،انا،دلکشی

میرےلفظوں میں لپٹاہوامال وزر

میری پوروں سےبہتی ہوئی روشنی

میرےماتھےپہ لکھےہوۓسب ہنر

تجھ سےشکوہ نہیں

اےعدومیرےمیں تیری ہمدردہوں

تیری بےچہرگی مجھ کوبھاتی نہیں

تجھ سےکیسےکہوں!!!

تجھ سےکیسےکہوں!قتل کرنامجھےتیرےبس میں نہیں

(اورہوبھی اگر،تیری کم مائیگی مامداوانہیں)

ہاں مگرتیری دل جوئی کےواسطے

میری گردن پہ یوں تیراخنجررہے

(تیری دانست میں)

کھیل جاری رہے

ماخذ :نظموں کادرکھلتاہے، مرتب: نعمان فاروق

Recommended Posts

Leave a Comment

Jaeza

We're not around right now. But you can send us an email and we'll get back to you, asap.

Start typing and press Enter to search